پولیس نے شہباز گل کے 14 روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کردی

پاکستان تحریک انصاف ( پی ٹی آئی ) کے رہنما اور چیف آف اسٹاف شہباز گل کو اسلام آباد کی مقامی عدالت میں پیش کردیا گیا ہے، جہاں پولیس کی جانب سے 14 روزہ جسمانی ریمانڈ پر فیصلہ محفوظ کیا گیا ہے۔
شہباز گل کو تھانہ کوہسار کی پولیس نے ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ کے روبرو پیش کیا گیا۔ ڈیوٹی مجسٹریٹ عمر شبیر نے کیس کی سماعت کی۔ اس موقع پر پولیس کی جانب سے شہباز گل کے 14 روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی گئی، جس پر شہباز گل کے وکیل نے مخالفت کی۔
عدالت کی جانب سے 14 روز جسمانی ریمانڈ کی استدعا پر فیصلہ محفوظ کرلیا گیا ہے
قبل ازیں شہباز گل کو ہتھکڑیاں لگا کر عدالت لایا گیا، جب کہ انسداد دہشت گردی اسکواڈ کے اہلکاروں نے انہیں گھیرے میں لیا ہوا تھا۔ کسی بھی ناخوشگوار واقعہ سے نمٹنے کیلئے پولیس کی بھاری نفری عدالتی احاطے اور اطراف میں تعینات کی گئی، جس میں پولیس کمانڈوز بھی موجود رہے۔
میڈیا کا داخلہ بند
شہباز گل کو کمرہ عدالت میں پہنچانے کے بعد عدالت کے دروازے بند کردیئے گئے، جب کہ میڈیا نمائندوں کو بھی اندر آنے سے روک دیا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ جج کے حکم پر میڈیا نمائندگان کو روکا گیا ہے۔
واضح رہے کہ شہباز گل کے خلاف تھانہ کوہسار میں مبینہ غداری کا مقدمہ درج ہے۔
بغاوت کے مقدمے کی تفصیل
پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما شہباز گل کے خلاف سٹی مجسٹریٹ کی مدعیت میں درج بغاوت کے مقدمے کی تفصیل سامنے آگئی۔
ایف آئی آر میں درج ہے کہ شہباز گل نے ساتھیوں کے ساتھ مل کر ایک ایجنڈے کی تکمیل کے لیے نجی ٹی وی چینل پر الفاظ کہے۔
مقدمے میں کہا گیا کہ نجی ٹی وی چینل اے آر وائی نیوز کی انتظامیہ اس معاملے میں شریک جرم ہے، جس نے ملزم کو دانستہ طور پر پورا موقع دیا۔ ایف آئی آر میں درج ہے کہ ٹی وی پر شہباز گل کا بیان اور تقریر کا مقصد فوج میں بغاوت پھیلانا اور سازش کرنا تھا، اُن کی کوشش تھی کہ فوج کے مختلف گروہ بن جائیں۔
مقدمے میں کہا گیا کہ شہباز گل کے بیان اور تقریر کا مقصد تھا کہ عوام میں پاک فوج کے خلاف سازش کے تحت نفرت پھیلائی جائے۔ ایف آئی آر میں درج ہے کہ پی ٹی آئی رہنما کے مقصد کا فوجی جوانوں کو اپنے افسران کا حکم نہ ماننے کی ترغیب دینا تھا۔
مقدمے میں کہا گیا کہ شہباز گل نے ملک میں انتشار پھیلانے اور فوج کو کمزور اور تقسیم کرنے کے لیے بیان دیا۔ ایف آئی آر میں مزید کہا گیا کہ شہباز گل نے پاکستان کی سالمیت کو نقصان پہنچانے کے لیے بیان دیا، وہ ملک دشمن ایجنڈے کی تکمیل کی مجرمانہ سازش کے مرتکب ہوئے ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں