ملکہ برطانیہ ایلزبتھ دوئم انتقال کرگئیں

ملکہ برطانیہ ایلزبتھ دوم 96 سال کی عمر میں انتقال کر گئیں، وہ برطانوی تاریخ میں سب سے زیادہ عرصہ 70 برس تخت پر براجمان رہیں۔
رپورٹ کے مطابق شاہی خاندان نے ملکہ برطانیہ ایلزبتھ دوئم کے انتقال کی تصدیق کردی، شاہی خاندان کا کہنا ہے کہ ملکہ کا انتقال بیل مورل پیلس میں ہوا۔
میڈیا رپورٹس کے مطابق شاہی محل بکنگھم پیلس نے ملکہ برطانیہ ایلزبتھ دوئم کے انتقال کا اعلان کیا، ملکہ کی تدفین تمام سرکاری اعزازات کے ساتھ ہوگی۔
ملکہ ایلزبتھ دوئم گزشتہ 70 برس سے ملکہ تھیں، انہوں نے 6 فروری 1952ء کو 25 سال کی عمر میں شاہی تخت سنبھالا، وہ 21 اپریل 1926ء کو مے فیئر میں اپنے دادا دادی کے گھر پیدا ہوئی تھیں۔
ملکہ ایلزبتھ کے انتقال پر برطانیہ میں 10 روزہ سوگ کا اعلان کیا گیا ہے، اس دوران یونین جیک (برطانوی پرچم) سرنگوں رہے گا۔
ملکہ ایلزبتھ کے چاروں بچے سابق شہزادہ چارلس، شہزادی این، شہزادہ اینڈریو اور شہزادہ ایڈورڈ بھی بیل مورل میں موجود ہیں۔
ایلزبتھ دوئم کے بیٹے شہزادہ چارلس برطانیہ کے نئے بادشاہ ہوں گے۔
برطانیہ کے نئے بادشاہ چارلس کا اپنے بیان میں کہنا ہے کہ والدہ کا انتقال برطانوی قوم اور شاہی خاندان کیلئے بڑا صدمہ ہے، برطانوی ملکہ اور پیاری ماں کی رحلت پر سوگ میں مبتلا ہیں، ملکہ کی کمی برطانیہ اور کامن ویلتھ ممالک میں محسوس کی جائے گی، دنیا بھر میں ملکہ برطانیہ کے چاہنے والے بھی غم میں مبتلا ہیں
برطانوی میڈیا کے مطاق ملکہ برطانیہ کی طبیعت ناساز تھی، ڈاکٹروں نے ان کی صحت سے متعلق تشویش کا اظہار کیا تھا۔
میڈیا رپورٹس کے مطابق پرنس چارلس اور کمیلا پارکر بھی ملکہ برطانیہ کی عیادت کیلئے پہنچ گئی تھیں، ان کے علاوہ ڈیوک اور ڈچز آف کیمرج پرنس ولیم اور کیٹ مڈلٹن بھی ملکہ کی عیادت کیلئے بالمورال شاہی محل میں موجود تھیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں