ریلیف کمشنر پنجاب بابر حیات تارڑ نے تحفظ و ریلیف ایکٹ کا نفاذ کر دیا

گجرات (نمائندہ خصوصی) حکومت پنجاب کی ہدایات کے مطابق ریلیف کمشنر پنجاب بابر حیات تارڑ نے پنجاب نیشنل کلائمیٹ (تحفظ و ریلیف) ایکٹ کا نفاذ کر دیا ہے، اس حکم کا اطلاق فوری طور پر ہوگا. ریلیف کمشنر پنجاب کیطرف سے جاری حکمنامہ کے تحت سموگ اور فضائی آلودگی کی روک تھام کے لئے صوبہ بھر میں فصلوں کے مڈھ جلانے پر پابندی ہوگی، زگ زیگ ٹیکنالوجی استعمال کرنے والے بھٹہ خشت نومبر سے 31 دسمبر تک بند رہیں گے، زگ زیگ ٹیکنالوجی پر منتقل ہو چکے بھٹہ خشت ایس او پیز کے مطابق چل سکیں گے جبکہ پرانی ٹیکنالوجی استعمال کرنیوالے بھٹہ خشت کو 31 دسمبر تک زگ زیگ پر منتقل ہونے کی ہدایت کی گئی ہے. ریلیف کمشنر کے احکامات کے مطابق صوبے میں آلودگی کا باعث بننے والی انڈسٹریز، دھواں چھوڑنے والی گاڑیوں کے استعمال، کنسٹرکشن میٹریل کی اوپن ڈمپننگ، کور کئے بغیر ٹرانسپوٹیشن کی ممانعت ہوگی. اسی حکمنامہ کے ذریعے کوڑا کرکٹ جلانے، تجاوزات کرنے، ایسے اقدامات جس سے دھول مٹی فضا میں بلند ہو اسکی بھی ممانعت ہوگی.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں