تھانہ میں نوجوان کی ہلاکت ورثاء کا ایس ایچ او لیاقت گجر کو گرفتار کرنیکا مطالبہ

گجرات (نمائندہ خصوصی) ککرالی پولیس کے تشدد سے نوجوان کی ہلاکت ورثاء کامطالبہ‘ SHO لیاقت گجر کو گرفتار کیا جائے۔جی ٹی روڈ کھاریاں 5گھنٹے تک بلاک‘ پولیس نے آج شام تک ٹائم لے لیا۔ ذرائع کے مطابق سخاوت علی ولد شرافت علی ساکن ملکی پر مبینہ طور پر ککرالی پولیس نے چوری کیس میں شدید تشدد کیا۔ جس سے وہ دم توڑ گیا۔ اور ورثائڈیڈباڈی لیکر THQ ہسپتال کھاریاں آئے۔ جہاں سے انہیں گجرات اور پھر واپس کھاریاں بھیجا گیا۔ ورثائنے مشتعل ہو کر 5 گھنٹے تک جی ٹی روڈ کھاریاں بلاک کر دی۔ جس سے گاڑیوں کی میلوں لمبی لائنیں لگ گئیں۔ اس دوران DSP کھاریاں، اسسٹنٹ کمشنر کھاریاں کے مظاہرین سے مذاکرات ناکام ہو گئے۔ بعد میں DPO گجرات عمر سلامت، SP انویسٹی گیشن عمران رزاق بھی موقع پر پہنچ گئے۔ جن کے آج بدھ کی شام تک مطالبہ پورے کرنے کی یقین دہانی پر مظاہرین نے شام گئے احتجاج ختم کر دیا۔ میڈیا ذرائع کے مطابق آئی جی پنجاب انعام غنی نے آر پی او گوجرانوالہ سے واقعہ کی رپورٹ طلب کر لی ہے۔ قبل ازیں DPOگجرات کے حکم پر 10 پولیس ملازمین کیخلاف مقدمہ درج کرکے 2 کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں