بلاول بھٹو کی لالہ موسی آمدگجرات انتظامیہ نے سیکورٹی سخت کر دی

گجرات(نمائندہ خصوصی) گوجرانوالہ میں ہونیوالے آج جلسہ میں چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری قافلے کی شکل میں گجرات سے لالہ موسی کائرہ ہاؤس پہنچ گئے جبکہ شہر بھر میں سیکورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں جگہ جگہ پولیس اہلکاروں کو تعینات کر دیاگیا ہے کیونکہ گوجرانوالہ میں ہونیوالے جلسہ میں پاکستان پیپلز پارٹی،پاکستان مسلم لیگ ن،جے یو ایف آئی کے کارکن جناح سٹیڈیم میں بھر پور شرکت کریں گے گجرات شہر میں جگہ جگہ پولیس اور ایلیٹ فورس کے جوانوں نے اپنی اپنی پوزیشنیں سنبھال لی ہے دریا چناب سے لے کر کائرہ ہاؤس تک سیکورٹی کے سخت انتظامات کر دئیے گئے ہیں سیکورٹی کا جائزہ لینے کیلئے ڈپٹی کمشنر گجرات سیف انور جپہ،ڈی پی او گجرات عمر سلامت نے کائرہ ہاؤس جا کر سیکورٹی کے حوالے سے جائزہ لیا اس موقع پر مسلم لیگ ن کے کارکنوں نے اپنی قائد کے استقبال کیلئے تیاریاں زور شور سے شروع کر رکھی ہیں جبکہ پولیس کی جانب سے مختلف جگہوں پر کنٹینر بھی لگا دئیے گئے ہیں جن میں لنگڑیال چوک چیک پوسٹ راجیکی اور دیگر جگہوں پر کنٹینر لگا کر راستوں کو بند کیا جا رہا ہے تاکہ کوئی بھی کارکن جلوس کی شکل میں جلسہ گاہ نہ پہنچ سکے اور اس کے ساتھ ساتھ حکومت پنجاب کی جانب سے جلسہ گاہ جانے کیلئے شرطیں بھی رکھ دی گئی ہیں جن میں ایس او پیز پر عمل در آمد لازم ہو گا تمام کارکن ماسک پہن کر جلسہ گاہ میں شامل ہوں گے اور اس کے ساتھ ساتھ مسلم لیگ ن کی جانب سے ہدایات جاری کر دی گئی ہیں کہ ماسک پہن کر جلسہ گاہ میں تشریف لائیں مسلم لیگ ن نے اس حوالے سے اپنی تمام تر حکمت عملی اپنا لی ہے ہمیشہ کی طرح پارٹی اپوزیشن میں رہ کر احتجاج کرتی ہیں یہ ان کا حق بنتا ہے مگر پاکستان تحریک انصاف نے اپنی اس تمام تر صلاحیتوں کو بروئے کا ر لاتے ہوئے ایس او پیز پر عمل در آمد ضرور کر وانا ہے گجرات شہر میں آ ر ٹی سیکرٹری کی جانب سے کئی ایسے اڈے ہیں جن کو سیل کر کے ان کی گاڑیاں پولیس کے حوالے کر دی گئی ہیں کیونکہ گوجرانوالہ جلسہ میں مسلم لیگ ن پیپلز پارٹی کے کارکن شرکت نہ کر سکیں مگر ذرائع کے مطابق دیکھنا یہ ہے کیا مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی اپنا اپنا جلسہ کر نے میں کامیاب ہو جائے گی یا نہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں