THQسرائے عالمگیر میں دہشتگردی کی پر زور الفاظ میں مذمت کرتے ہیں: ڈاکٹر سعود افضل

گجرات(کامرس رپورٹر) ڈاکٹر سعود افضل صدرپاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن ضلع گجرات،ڈاکٹر عباس چوہدری جنرل سیکرٹری پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن ضلع گجرات،ڈاکٹر احتشام الحق صدرینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن گجرات،ڈاکٹر محمد ندیم سینئر نائب صدرینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن گجرات نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ بروز بدھ شام کو ٹی ایچ کیو سرائے عالمگیر میں دہشتگردی کا بد ترین واقع پیش آیا جس کی ہم پرذور الفاظ میں مذمت کرتے ہیں۔ایک مریض دل کے اٹیک کے ساتھ ایمرجنسی لایا جاتا ہے جو ECG کرتے ہی Collapse کر گیا اور اسی دوران دس گیارہ لواحقین نے ڈیوٹی پر موجودلیڈی ڈاکٹر اور ڈسپنسر اور دیگر عملے کو گالم گلوچ اور مارنا* شروع کر دیا۔ ڈپٹی میڈیکل سپرانٹینڈنٹ نے جب ان کو سمجھانے کی کوشش کی تو اس کو بھی ان غنڈوں نے مارا۔ اس مار کٹائی کے نتیجے میں ایک ڈسپنسر سر پر چوٹ لگنے سے شدید زخمی ہے۔ سلام ہے ڈاکرز اور عملے کو جنہوں نے تضحیک کے باوجود متعلقہ مریض کا علاج جاری رکھا اور stabilisation کے بعد اس کو ریفر کیا۔ اور اب وہ بہتر حالت میں جہلم کارڈیک سنٹر داخل ہے۔کرونا وائرس کی وبا کے خلاف جنگ میں سرائے عالمگیر کے ڈاکٹرز کی خدمات مثالی ہیں۔ ضلع گجرات میں تحصیل سرائے عالمگیر سب سے زیادہ متاثر ہوئی اور وہاں کے ڈاکٹرز نے دن رات ایک کر کے اور اپنی جان داو پر لگا کر اپنی عوام کی خدمت کی۔بجائے اپنے ڈاکٹرز کے شکر گزار ہونے کے الٹا ان پر تشدد قابل مذمت ہے اور *ہم DSP سرائے عالمگیر، DPO گجرات، اور DC گجرات کو سوموار 03-08-2020 تک کا وقت دے رہے ہیں اور ان سے مطالبہ کرتے ہیں کہ ان غنڈوں کو جلد از جلد گرفتار کر کے قرار واقع سزا دی جائے ورنہ دونوں تنظیمیں، انتہائی اقدام اٹھانے پر مجبور ہوں گی۔مزید ہم، وزیر صحت، وزیر قانون اور وزیر اعلیٰ پنجاب سے ایک دفعہ پھر مطالبہ کرتے ہیں کہ خدارا سکیورٹی بل کو جلد از جلد پاس کروایا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں