الیکشن کمیشن کا جنوبی وزیرستان میں 2 آزاد امیدواروں کی گرفتاری کا نوٹس

اسلام آباد(جے ایم ڈی) الیکشن کمیشن پاکستان نے جنوبی وزیرستان میں 2 آزاد امیدواروں کی گرفتاری کا نوٹس لے لیا۔

الیکشن کمیشن نے جنوبی وزیرستان میں 2 آزاد امیدواروں کی گرفتاری کا نوٹس لیتے ہوئے سیکرٹری داخلہ اور قبائلی امور خیبر پختونخوا کو ذاتی حیثیت میں طلب کرلیا۔ ترجمان الیکشن کمیشن الطاف خان کے مطابق سیکرٹری داخلہ و قبائلی امور کو کل 28 جون کو طلب کرتے ہوئے آزاد امیدواروں کو تھری ایم پی او کے تحت گرفتار کرنے پر وضاحت طلب کرلی ہے۔

قومی اسمبلی میں قبائلی اضلاع کی 16 نشستوں پر انتخاب ہونے والے ہیں اور جنوبی وزیرستان میں انتخابات میں حصہ لینے والے امیدواروں کو پولیس اور انتظامیہ کی جانب سے تنگ کرنے کی شکایات سامنے آئی ہیں۔
پی پی پی کے امیدوار عمران مخلص، آزاد امیدوار عارف وزیر اور آزاد امیدوار اقبال لالا کو تھری ایم پی او کے تحت ایک ماہ کے لیے گرفتار کرلیا گیا ہے۔ دوسری جانب جنوبی وزیرستان میں پولیس نے وانا بازار میں اے این پی کے انتخابی دفتر پر چھاپہ مار کر ضلعی جنرل سیکرٹری یاسین خان اور تحصیل شکئی کے صدر امیرحمزہ کو گرفتار کرلیا۔

اے این پی کے امیدوار تاج وزیر نے کہا کہ پولیس دفعہ 144 کے بہانے سیاسی جماعتوں کو بے جاتنگ کررہی ہے، تحریک انصاف کے سوا تمام جماعتوں کو دیوار سے لگایا جارہا ہے، اس سارے معاملے پر الیکشن کمیشن کی خاموشی معنی خیز ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں