کڈنی سنٹر میں 30725 فری ڈائیلسزہو چکے ہیں:ڈپٹی کمشنر

گجرات(صابرعلی صابر )کڈنی سنٹر گجرات کو ابتک مخیر حضرات سے عطیات اور کرایہ جات کی مد میں ابتک 22کروڑ36لاکھ روپے سے زائد آمدن ہوئی، دسمبر 2016میں آغاز سے ابتک 30725فری ڈائیلسز کئے جاچکے ہیں، یہ تفصیلات ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر خرم شہزاد کی زیر صدارت بورڈ آف گورنرز کے اجلاس میں بتائی گئیں، بورڈ آف مینجمنٹ کے سربراہ میاں محمد اعجاز، چوہدری عمر سعید،چوہدری اظہر حسین، جاوید بٹ، نثار الدین ساجد، حاجی نواز ریحانیہ، چوہدری اعجاز احمد،میاں غلام محی الدین، عاصم بٹ، چوہدری اصغر، طارق بلال ملک، احمد حسن مٹو، بابر بھیا، امتیاز کوثر، خادم علی خادم،ایڈمنسٹریٹر ڈاکٹر عباس گوندل بھی موجود تھے۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ مخیر حضرات سے ملنے والے عطیات 21کروڑ14لاکھ روپے سے زائد ہیں، کرایہ، متفرق ذرائع سے ایک کروڑ22لاکھ سے زائد آمدن ہوئی، بلڈنگ کی تعمیر پر 6کروڑ65لاکھ روپے سے زائد، ڈائیلسز مشینوں کی خریداری پر 3کروڑ41لاکھ روپے سے زائد، متفرق اخراجات 10کروڑ54لاکھ روپے سے زائد رہے جبکہ باقی رقم کڈنی سنٹر کے اکاؤنٹ میں موجود ہے۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ کڈنی سنٹر کیساتھ رجسٹرڈ مریضوں کی تعداد 671ہے، کل زیر علاج مریضوں کی تعداد 345ہے، 2016میں کڈنی سنٹر میں 297، 2017میں 7845، 2018میں 14434اور روں سال ابتک 8149ڈائیلسز کئے جاچکے ہیں۔ چوہدری عمر سعید آف سروس انڈسٹریز نے بتایا کہ چوہدر ی احمد سعید مرحوم کے وعدہ کے مطابق کڈنی سنٹر کیلئے لتھو ٹرپسی مشین جلد فراہم کر دی جائے گی۔ ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر خرم شہزاد نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اہل گجرات نے صحت و تعلیم کے میدان میں خدمت کی روشن مثالیں قائم کی ہیں، حکومت پنجاب اور ضلعی انتظامیہ مخیر حضرات کے بھرپور تعاون کو قدر کی نگاہ سے دیکھتی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں