2 ارکان کی تقرری تاخیر کا شکار، الیکشن کمیشن کے امور متاثر ہونے لگے

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) الیکشن کمیشن کے بلوچستان اور خیبرپختونخوا سے ارکان کے تقرر کی ڈیڈ لائن ختم ہوئے 2 ہفتے گزر گئے، تاحال تقرری کا قانونی عمل ہی شروع نہیں ہو سکا، الیکشن کمیشن کا کام چوپٹ ہونے لگا۔

عجب تماشہ ہے کہ بلوچستان کے بلدیاتی انتخابات کی تیاریاں شروع ہیں مگر الیکشن کمیشن میں بلوچستان کا رکن ہی نہیں، اسی طرح فاٹا کی صوبائی نشستوں کے انتخابات بھی سر پر آن پہنچے مگر کمیشن کے پی رکن کے بغیر اور ادھورا ہے۔ مقدمات کی سماعت کا سارا بوجھ چیف الیکشن کمشنر اور باقی 2 اراکین پر پڑگیا۔

الیکشن کمیشن اراکین کے تقرر کا پہلا قدم، وزیراعظم اور اپوزیشن لیڈر کی مشاورت ہے، دونوں الیکشن کمیشن ممبر کیلئے متفقہ تین نام پارلیمانی کمیٹی کو تجویز کرتے ہیں، اتفاق رائے نہ ہو تو تین، تین الگ نام بھجواتے ہیں، آئین کے تحت رکن الیکشن کمیشن کا عہدہ خالی ہونے کے 45 روز میں نئی تقرری ضروری ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں